میں کوئی انسٹا گرام سٹوری نہیں بلکہ ایک حقیقی جیتی اور جاگتی لڑکی ……؟ بھارتی اداکارہ پریانکا چوپڑا نے واضح کر دیا

بچپن میں میں بری طرح احساسِ کمتری کا شکار تھی کیونکہ امریکہ میں سکول کی تعلیم کے دوران کچھ لوگ انھیں ان کے رنگ پر طعنے دیا کرتے تھے

میں کوئی انسٹا گرام سٹوری نہیں بلکہ ایک حقیقی جیتی اور جاگتی لڑکی ……؟ بھارتی اداکارہ پریانکا چوپڑا نے واضح کر دیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق بھارتی فلم انڈسٹری کی مشہور ماڈل و اداکارہ پریانکا چوپڑا کا کہنا تھا کہ ‘میں محض ایک خبر یا انسٹا سٹوری نہیں بلکہ ایک جیتی جاگتی لڑکی ہوں جسکے خواب، خواہشیں اور چاہتیں ہیں۔ایک ایسی مڈل کلاس لڑکی جس نے اپنی محنت اور حوصلے سے یہ مقام حاصل کیا ہے اور مجھے خود پر فخر ہے۔’ فلم ناقد انوپما چوپڑہ کے ساتھ یہ بات کرتے ہوئے پریانکا چوپڑہ کی آنکھوں میں چمک اور انداز انتہائی پر اعتماد تھا۔ یہ وہی پریانکا تھیں جن کا کہنا تھا کہ بچپن میں میں بری طرح احساسِ کمتری کا شکار تھی کیونکہ امریکہ میں سکول کی تعلیم کے دوران کچھ لوگ انھیں ان کے رنگ پر طعنے دیا کرتے تھے لیکن جب 17 سال کی عمر میں انھوں نے مس ورلڈ کا خطاب جیتا تو انھیں خود پر یقین آنے لگا اور اس یقین نے پرینکا کو نہ صرف بالی ووڈ کی مہنگی ترین اداکاروں میں سے ایک بنایا بلکہ مِس ورلڈ سے شروع ہونے والا ان کا سفر کامیابی کی کئی منزلیں طے کرتا ہوا ہالی ووڈ تک پہنچا اور آج تک جاری ہے۔

تیرہ سال کی عمر میں ہائی سکول کی تعلیم کے لیے پرینکا کو امریکہ بھیج دیا گیا جہاں وہ اپنی آنٹی کیساتھ رہا کرتی تھیں لیکن سکول میں انھیں ساتھ پڑھنے والے کچھ بچوں سے نسلی تعصب کا سامنا کرنا پڑا۔ پریانکا کا کہنا تھا کہ میں سانولی رنگت کے ساتھ بہت پتلی دبلی ہوا کرتی تھی اور میری ٹانگوں پر سفید دھبے تھے لیکن میں نے اس قدر محنت کی کہ آج میری وہی ٹانگیں بارہ بڑے برانڈز کی نمائندگی کرتی ہیں۔

18 جولائی 1982 کو انڈین فوج میں بطور ڈاکٹر کام کرنے والے اشوک اور مدھو چوپڑہ کے گھر پیدا ہونے والی پرینکا چوپڑہ کا کہنا ہے جب وہ پیچھے مڑ کر دیکھتی ہیں تو انھیں احساس ہوتا ہے کہ یہ سفر آسان نہیں تھا جس میں ناکامیاں بھی ہیں اور غلطیاں بھی۔ اس سفر میں دکھ بھی ہے اور درد بھی لیکن ساتھ ہی یہ احساس بھی ہے کہ اگر میں یہاں پہنچ سکتی ہوں جہاں آج ہوں تو کوئی بھی لڑکی یہ مقام حاصل کر سکتی ہے۔ پریانکا کا کہنا تھا کہ وہ اپنے ملک سے بے حد محبت کرتی ہیں لیکن مغرب میں ان کا تعارف صرف انڈین اداکارہ یا انڈین لڑکی کے طور پر کیوں کرایا جاتا ہے ان کی شناخت صرف ان کے ملک تک محدود نہیں ہے۔

Source-https://www.khouj.com/entertainment/284689/

0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments