انگلش ٹیم کا دورہ پاکستان منسوخ، انگلینڈ کی سابق خواتین کرکٹرز بھی بول پڑیں

زیادہ مایوس کن ہے کہ ورک لوڈ کا بہانہ بنایا گیا ہے،مجھے پاکستان کرکٹ بورڈ سے ہمدردی ہے: سابق کرکٹرز

انگلش کرکٹ ٹیم کی جانب سے دورہ پاکستان منسوخ کرنے کے بعد انگلینڈ کی سابق خواتین کرکٹرز بھی پاکستان کے حق میں بول پڑی ہیں۔

انٹرنیشنل میڈیا کے مطابق انگلش ویمنز ٹیم کی سابق کپتان شیرلٹ ایڈورڈز نے بھی انگلینڈ ویمنز ٹیم کے دورہ پاکستان کی منسوخی پر مایوسی کا اظہار کیا۔ شیرلٹ ایڈورڈز کا کہنا تھا کہ مینزٹیم کیلئے دورے میں آئیڈیل تیاری نہ ہو مگر ویمنز ٹیم کیلئے دورہ بہت اہم تھا۔ سابق کپتان نے کہا کہ زیادہ مایوس کن ہے کہ ورک لوڈ کا بہانہ بنایا گیا ہے،مجھے پاکستان کرکٹ بورڈ سے ہمدردی ہے، پی سی بی نے ہمارے لیے پچھلے سال بہت کچھ کیا، لگتا ہے ہم بھول گئے ہیں۔ اس کے علاوہ انگلش ویمنز ٹیم کی سابق کھلاڑی ایبونی جوئیل رین فورڈ نے کہا کہ انگلینڈ کرکٹ بورڈ کے بیان سے واضح ہے کہ سکیورٹی کا ایشو نہیں تھا، پاکستان نیکورونا کے دوران اپنے بہتر حالات سے نکل کر ہماری مدد کی، اب اس کا جواب دینے کا موقع تھا۔ رین فورڈ کا کہنا تھا کہ سکیورٹی کا مسئلہ سڑکیں بند، ہوٹل سیل کرکے اور گارڈز مہیا کرکے حل ہوسکتا ہے جب کہ ورک لوڈ کا مسئلہ تھا تو کیا انگلینڈ کو دو منٹ پہلے پتہ چلا کہ ٹوور ہورہا ہے؟ سابق کرکٹر نے کہا کہ میری نظر میں یہ فیصلہ ایک مضبوط ٹیم کا کم طاقتور ٹیم کیخلاف ہے جس میں نتائج کی پرواہ نہیں کی گئی۔

Visit To News Source
0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments