نوازشریف کی میڈیکل رپورٹس کا جائزہ لینے کے لیے بورڈ تکشیل دے دیا گیا

نوازشریف کی واپسی کے بارے میں رائے دینے کیلئے سینئر پروفیسروں پر مشتمل 9 رکنی سپیشل میڈیکل بورڈ 5 دن کے اندر اپنی رپورٹ پیش کرے گا۔وزیراعلیٰ کے معاون خصوصی حسان خاور کا ٹویٹ

لاہور(اردو پوائنٹ تازہ ترین اخبار ۔ 14 جنوری 2022ء ) سابق وزیراعظم نوازشریف کی میڈیکل رپورٹس کا جائزہ لینے کے لیے بورڈ تکشیل دے دیا گیا۔وزیراعلیٰ کے معاون خصوصی حسان خاور نے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ وفاقی کابینہ کے فیصلے کی روشنی میں حکومت پنجاب نے نواز شریف کی میڈیکل رپورٹس کے جائزے اور ان کی واپسی کے بارے میں رائے دینے کیلئے سینئر پروفیسروں پر مشتمل 9 رکنی سپیشل میڈیکل بورڈ تشکیل دے دیا ہے۔ یہ بورڈ 5 دن کے اندر اپنی رپورٹ پیش کرے گا۔

قبل ازیں وفاقی حکومت نے سابق وزیراعظم نواز شریف کے معاملے پر اپوزیشن لیڈر شہباز شریف کے خلاف عدالت جانے کا اعلان کیا تھا۔وفاقی وزیر اطلاعات بعد چوہدری نے وفاقی کابینہ کے اجلاس کے بعد میڈیا بریفنگ میں بتایا کہ نواز شریف کی صحت کا ڈرامہ رچایا گیا جو درست نہیں، اب کابینہ نے اس معاملے پر شہباز شریف کے خلاف لاہور ہائی کورٹ سے رجوع کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔ فواد چودھری نے مزید کہا کہ نواز شریف نے سترہ مہینے میں کوئی علاج نہیں کرایا ،انہوں نے جو رپورٹس بھیجی ہیں انہیں پنجاب حکومت نے مسترد کر دیا ہے۔ان کا باہر جانا علاج کے لئے نہیں بلکہ ایک فراڈ تھا اور اس فراڈ میں شہباز شریف شریک ہیں۔انہوں نے مزید کہا کہ نواز شریف فیملی سے پاکستانی ہائی کمیشن نے رابطہ کیا ہے لیکن انہوں نے رپورٹس نہیں دیں۔ پاکستانی ایمبیسی نے رابطہ کیا مگر کوئی جواب نہیں دیا، اب شہباز شریف اپنے بیان کے مطابق نواز شریف کو پاکستان لانے کے اقدامات کریں۔فواد چوہدری نے کہا کہ عدالت میں یہ درخواست کریں گے کہ شہباز شریف نواز شریف کو واپس لائے بصورت دیگر انہیں نااہل قرار دیا جائے۔

0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments