بھارت کے تعلیمی اداروں میں حجاب پر پابندی، ملالہ یوسف کا بھی ردعمل سامنے آگیا

حجاب والی لڑکیوں کو سکول میں داخل ہونے سے روکنا خوفناک ہے‘ بھارتی رہنماء مسلم خواتین کو مرکزی دھارے سے الگ کرنے کے عمل کو روکیں

امن کا نوبیل انعام حاصل کرنے والی پاکستانی طالبہ اور سماجی کارکن ملالہ یوسف زئی کا بھارتی ریاست کرناٹک کے تعلیمی اداروں میں حجاب پر پابندی کے معاملے پر ردعمل سامنے آگیا۔

تفصیلات کے مطابق ملالہ یوسف زئی نے کہا تھاکہ حجاب والی لڑکیوں کو سکول میں داخل ہونے سے روکنا خوفناک ہے۔ ان کا کہنا تھا کہ کم یا زیادہ لباس پہننے کے معاملے میں خواتین پر اعتراضات برقرار ہیں۔ انہوں نے مطالبہ کیا کہ بھارتی رہنماء مسلم خواتین کو مرکزی دھارے سے الگ کرنے کے عمل کوروکیں۔

خیال رہے کہ گزشتہ دنوں بھارتی ریاست کرناٹک میں لڑکیوں کے ایک سرکاری کالج میں 6 مسلم طالبات کو حجاب پہننے کی وجہ سے کلاس سے باہر نکال دیا گیا تھا۔ یہ کیس مقامی ہائیکورٹ میں زیر سماعت ہے۔ آج بھی کرناٹک کے کالج جانے والی باحجاب طالبہ کو انتہاء پسند طلبہ کے جتھے نے ہراساں کیا۔ تاہم طالبہ نے بھی ڈٹ کر ہراساں کرنے والوں کا مقابلہ کیا اور اس واقعے کی ویڈیو سوشل میڈیا پر پھیل گئی۔

0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments