جمعیت علماء اسلام نظریاتی کے زیراہتمام ٹرانس جینڈر ایکٹ کے خلاف احتجاجی ریلی

جمعیت علماء اسلام نظریاتی کے زیراہتمام ٹرانس جینڈر ایکٹ کے خلاف احتجاجی ریلی مولنا عبدالقادر لونی ضلعی امیر مولنا قاری مہراللہ کے قیادت میں نکالی گٸی ریلی مختلف شاہراہوں سے ہوتے ہوٸے باچا خان چوک پر احتجاجی جلسہ عام ہوٸی احتجاجی جلسہ عام سے جمعیت علماء اسلام نظریاتی بلوچستان کے امیر مولناعبدالقادر لونی ضلعی امیر مولنا قاری مہراللہ مرکزی سیکرٹری اطلاعات سید حاجی عبدالستارشاہ چشتی مرکزی سیکرٹری مالیات حاجی حیات اللہ کاکڑ صوباٸی محتسب شیخ الحدیث مولنا نیازمحمد ناٸب امیر مولنا مفتی رحمت اللہ صوباٸی ڈپٹی جنرل سیکرٹری حاجی عبیداللہ حقانی صوباٸی سرپرست مولناخداٸے نظر صوباٸی ترجمان مولنا رحمت اللہ حقانی ضلعی صدر حافظ امین اللہ ودیگر خطاب کرتے ہوٸے کہا کہ ٹرانس جینڈر بل اللہ کے دین سے کھلم کھلا مذاق ہے اللہ تعالیٰ کے عطا کردہ قوانین میں کوئی حاکم وقت یا پارلیمنٹ تبدیلی نہیں کر سکتے ہیں یہ کسی کی شقاوت وبدبختی ہے کہ اسلام کا دعویٰ کرنے کے باوجود اللہ کے قوانین کو بدلنے کی جسارت کرے اور اس میں تحریف یا معطل کرنے کی کوشش کرے گزشتہ اقوام کی تباہی کا ایک سبب یہ بھی تھا کہ وہ گناہ کے کام مل کر اجتماعی طور پر کیا کرتے تھے یاخاموشی اختیار کرتے۔ سب سے سخت ترین عذاب قومِ لوط پر آیا جو اجتماعی عذاب بھی تھا اور انفرادی عذاب بھی۔ اس قوم کے جرائم میں ایک جرم یہ بھی تھا کہ وہ شرم و حیا سے عاری ہو چکی تھی اور بے حیائی کے کام بھری محفلوں میں سرِعام کیا کرتے تھے۔ ٹرانس جینڈر بل کے بے حیائی کے منطقی نتائج میں سے ایک بہت بھیانک نتیجہ خاندانی نظام کی تباہی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ہمارے دین کی پہچان شرم وحیا ہے۔محسنِ انسانیت  صلی اللہ علیہ وسلم  نے ارشاد فرمایا کہ جب تجھ میں حیا نہ رہے تو جو چاہے کرتا رہو
جب اﷲتعالیٰ کسی بندے کو ہلاک کرنا چاہے تواس سے شرم و حیا چھین لیتاہے ہماری ذلت و پستی کی وجہ یہی کہ اس قوم کا ضمیر مر چکا ہے کہ ٹرانس جینڈر پر بھی خاموش تماشاٸی بنی ہوٸی ہے انہوں نے کہا کہ مغربی تہذیب شیطانی معاشرت کو دنیا میں ڈھالنے کی ہر ممکن کوشش کی جا رہی ہے مغربی تہذیب ،شیطانی معاشرت کے اسلوب سکھائے جا رہے ہیں جو قومیں آج بڑی تیزی سے تباہیوں اور بربادیوں کی طرف بڑھ رہی ہیں اس کی وجہ شہوانیت بے حیائی و بے پردگی ہے انہوں نے کہا کہ اسلام اور آئین پاکستان سے منافی قانون سازی قوم کسی صورت قبول نہیں کرینگی ٹرانس جینڈر ایکٹ سے مغربی بدتہذیبی، جنسی آوارگی اور بے راہ روی کے لیے راہ ہموار کیا جارہا ہے مغربی این جی آوز کے ایجنٹ مملکت خداداد پاکستان میں مغربی تہذیب کی آبیاری کے لیے یہ کوششیں کر رہی ہے یہ اسلامی معاشرتی، اخلاقی اور خاندانی نظام کی تباہی ہے انہوں نے کہا کہ ٹرانس جینڈر بل کی تمام شقیں اسلامی تعلیمات سے بغاوت کا منہ بولتا ثبوت ہےمعاشرہ کو برباد کرنے کے لیے شیطانی منصوبوں کو پاکستان پر مسلط کیا جارہا ہے۔یہ کسی صنف سے ہمدردی کی بنیاد پر نہیں بلکہ یہ قانون ہم جنس پرستوں کے تحفظ کا قانون ہے حقوق کے نام پر ٹرانس جینڈر ایکٹ، عورت مارچ، حقوق نسواں یہ سب شیطانی قوتوں کی بے حیاٸی اور نوجوان نسل کو گمراہ کرنے کی منصوبے ہیں ان مغربی قوتوں کی ایماء پر ملک پر مسلط کیا جارہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ 2018 میں مولنا فضل الرحمٰن مسلم لیگ (ن)کے اتحادی تھے کہ اسپیکر ایاز صادق نے یہ بل پاس کیا جب بھی مولنا فضل الرحمٰن کے منہ میں اقتدار کا نوالہ ہوتا ہے تو پھر نہ کوٸی فتوی آٸیگا اور نہ اتحادیوں کے خلاف بیان آٸیگا کیونکہ پھر تو اقتدار ان کی منہ سے نکل جاٸیگا انہوں نے کہا کہ جمعیت نظریاتی اس ٹرانس جینڈر ایکٹ کے خلاف میدان میں نکل جاٸینگی اور ہر فورم پر اس کے خلاف مٶثر آواز اٹھائی گی اور اس کو روکنے کیلئے آٸینی اور عملی جنگ لڑیں گی 23 ستمبر جمعہ کے دن یوم احتجاج ہوگا علماء اور خطباء اس کے منفی اثرات اور شیطانی منصوبوں سے قوم کو آگاہ کرے اور جلد پورے ملک میں احتجاجی دھرنوں کا اعلان بھی کرینگی انہوں نے کہا کہ اراکین پارلیمنٹ اس بے حیاٸی سے اللہ کے قہر وغضب کو دعوت نہ دیں ٹرانس جینڈر بل کو یکسر مسترد کرے

0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments