سعودی عرب: کورونا وائرس پر قابو کے بعد ورک ویزوں کا حتمی اعلان کیا جائے گا

Spread the love

ریاض: سعودی عرب میں کورونا وائرس کے خاتمے یا اس وبا پر قابو پانے کے حوالے سے امور صحت کے اداروں کی رپورٹ کے بعد ہی اس بارے میں حتمی اعلان کیا جائے گا۔

سعودی عرب میں نئے غیر ملکیوں کیلئے ورک ویزوں کے اجرا کے بارے میں ابھی کوئی اطلاع نہیں ہے۔ سعودی حکام کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کی وبائی صورتحال پر قابو پانے کے حوالے سے امور صحت کے اداروں کی رپورٹ کے بعد ہی اس بارے میں حتمی اعلان کیا جائے گا۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے اردو نیوز میں چھپنے والی رپورٹ کے مطابق سعودی امیگریشن قوانین کے مطابق وہ غیر ملکی جو قانونی طور پر ’فائنل ایگزٹ‘ ویزے پر اپنے ملک جاتے ہیں، ان پر کسی قسم کی کوئی پابندی عائد نہیں، ایسے افراد جب چاہیں دوسرے ویزے پر سعودی عرب آنے کے اہل ہوتے ہیں۔

سعودی عرب میں کورونا وائرس کے نئے کیسز مسلسل کم ہو رہے ہیں۔ معمولات زندگی احتیاطی تدابیر پر عمل کرتے ہوئے روز مرہ کے امور انجام دیئے جارہے ہیں۔ مملکت میں رہنے والوں کو عمرہ پرجانے کی اجازت دی گئی ہے تاہم بیرون ملک سے معتمرین کی آمد کےلیے آئندہ ماہ سے شیڈول جاری کیا جائے گا۔

خبر کے مطابق کورونا وائرس کی وجہ سے سعودی عرب میں احتیاطی تدابیر پر عملدرآمد جاری ہے۔ اس بارے میں نئے ورک ویزوں کے اجرا کے بارے میں تاحال کسی قسم کی کوئی اطلاع نہیں۔ متعلقہ اداروں کا کہنا ہے کہ کورونا وائرس کے خاتمے یا اس وبا پر قابو پانے کےحوالے سے امور صحت کے اداروں کی رپورٹ کے بعد ہی اس بارے میں حتمی اعلان کیا جائے گا۔

ادھر سعودی عرب میں عمرہ بحالی پروگرام کا دوسرا مرحلہ شروع ہو چکا ہے، جس کے تحت مسجد الحرام کی مجموعی گنجائش کے حساب سے یومیہ 75 فیصد لوگوں کو عمرہ ادا کرنے کی سہولت جاری کی جا رہی ہے۔ عمرہ کے لیے وزارت حج و عمرہ کی جانب سے پرمٹ کا حصول ’اعتمرنا‘ ایپ کے ذریعے مقرر کیا گیا ہے۔

پرمٹ حاصل کرنے والے قانونی طور پر مملکت میں مقیم ہوں یا خلیجی شہری ہوں۔ آئندہ ماہ سے بیرون مملکت سے عمرہ پر آنے والوں کے لیےمرحلے کا آغاز ہو گا جس کا اعلان اور طریقہ کار وزارت کی جانب سے جاری کیا جائے گا۔

کیا اقامہ ویلڈ ہوگا، اس حوالے سے یہ بات ذہن نشین کر لیں کہ جیسے ہی سعودی عرب کے ایئرپورٹ پر امیگریشن کائونٹر سے آپ کے پاسپورٹ پر ایگزٹ کی مہر لگائی جاتی ہے۔ اسی وقت محکمہ پاسپورٹ جیسے جوازات کہتے ہیں کے مرکزی سسٹم میں بھی آپ کی فائل بند کردی جاتی ہے جس کے بعد اقامہ بھی ختم ہوجاتا ہے۔ایگزٹ ہونے کے ساتھ ہی اقامہ بھی ختم ہو جاتا ہے۔

Facebook Comments

اپنا تبصرہ بھیجیں