میں تتلیاں بیچ کر اپنے تین بچوں کو پال رہی ہوں۔۔۔۔ لیکن یہ تتلیاں خریدتا کون ہے؟ جانیں ایک دلچسپ کہانی

لوگ تتلیاں کیوں پالتے اور کیا لوگ تتلیاں بھی پالتے ہیں، ان سوالوں کے جواب دے رہی ہیں کینیا کے ساحلی علاقے کے قریب بسنے والی صوفیہ جو بے شمار تتلیاں پال رہی ہیں۔

صوفیہ نے بی بی سی اردو سے بات کرتے ہوئے بتایا کہ وہ 2001 سے تتلیاں پال رہی ہیں، وہ ایسا کیوں کرتی ہیں اس کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ اس سے ان کی زندگی سنور گئی ہے صوفیہ تتلیاں بیچ کر اپنے بچوں کو اسکول بھیجتی ہیں اور یہی ان کا ذریعہ معاش ہے۔

صوفیہ نے بتایا کہ ان کے پاس کوئی نوکری نہیں تھی، وہ پہلے فرائی مچھلی بیچتی تھیں مگر جب انہوں نے تتلیاں پالنے کے پراجیکٹ کے بارے میں سُنا تو انہیں یہ بےحد دلچسپ لگا اور صوفیہ نے فوری یہ پیشہ اپناتے ہوئے تتلیاں پال کر مارکیٹ میں بیچنا شروع کر دیا۔

یاد رہے کہ اس پراجیکٹ کا نام کیپیپیو ہے اور یہ ایک ایسا پراجیکٹ ہے جو مقامی لوگوں کو جنگل سے تتلیاں پکڑنا اور ان کی پرورش کرنا سکھاتا ہے اس پراجیکٹ میں 86 فیصد خواتین شامل ہیں۔

پنجروں میں قید ان خوبصورت تتلیوں کو آم اور کیلے کھلائے جاتے ہیں جس کے بعد یہ انڈے دیتی ہیں جن میں سے سونڈیا نکلتی اور اور پھر فارم میں ان کی پرورش کی جاتی ہے۔

صوفیہ نے بتایا کہ ایک تتلی تین ہفتوں میں مکمل تیار ہو جاتی ہے، مگر اب سوال یہ اُٹھتا ہے کہ آخر ان تتلیوں کو خرید کون رہا یے۔

تتلیوں کو کون خریدتا ہے؟

کچھ نمائندے پیوپا کی شکل میں انہیں پالنے والوں سے خرید لیتے ہیں، انہیں پالنا محنت کا کام ہے جب موسم عروج پر ہوتا ہے تو انہیں پیچ کر 150 ڈالر ہر ہفتہ کمایا جاتا ہے۔

ان کی نسل اور قسم جانچ کر انہیں امریکہ برطانیہ اور ترکی سمیت دیگر ممالک میں بیچ دیا جاتا ہے جہاں یہ حسین اور دلکش تتلیاں نمائش گھروں کی زینت بنتی ہیں۔

بہت سے لوگ ان تتلیوں کو شادیوں کے لئے بھی خریدتے ہیں اور پھر شادی میں غباروں اور پٹاخوں کے بجائے ان رنگین تتلیوں کو فضا میں چھوڑ دیا جاتا ہے، زرا سوچیئے یہ منظر کتنا دلفریب لگتا ہوگا

0 0 vote
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments