اسرائیل سے تجارت اور راوبط رکھنے پر سزاؤں کا اعلان

اسلا م آباد(مانیٹرنگ ڈیسک/آن لائن)کویت نے اسرائیل کے ساتھ تجارت، روابط اور حمایت کو قابل سزا جرم قرار دے دیا۔

بین الاقوامی میڈیا رپورٹس کے مطابق خلیجی ریاست کی پارلیمنٹ نے اسرائیل کے ساتھ کسی بھی ‏قسم سے تجارتی و معاشی روابط پر سزا کا قانون منظور کر لیا ہے۔

511128170

مسودہ قانون کے تحت اسرائیل کے ساتھ تجارت کرنے والوں کو ایک سال سے تین سال تک سزا ہو ‏گی۔ اسرائیل کے ساتھ کسی بھی براہ راست یا بالواسطہ رابطوں پر بھی پابندی عائد ہو گی۔نجی ٹی وی اے آروائی کے مطابققانون کے تحت اسرائیل میں مقیم کسی کویتی یا غیر

ملکی کے مملکت میں سفر پر بھی پابندی ‏عائد ہو گی جب کہ کسی بھی قسم کے ہمدرددانہ جذبات اور حمایت بھی جرم قرار دیا جائے گا۔ یہ بل گزشتہ ہفتے پانچ ارکان اسمبلی کی جانب سے جمع کروایا گیا تھا جسے بحث کے بعد منظور‏کر لیا گیا۔دوسری جانب وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید کی کوششوں سے کویت نے10سال بعد پاکستانیوں

کیلئے ویزہ بحال کردیا۔تفصیلات کے مطابق وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کویت کے وزیراعظم شیخ صباح خالدالحامدالصباح سے ملاقات کی، جس میں ویزہ کی بحالی، دوطرفہ تعلقات کے فروغ سمیت مختلف باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال ہوا۔ملاقات کے دوران کویت کے وزیر داخلہ اور پاکستانی سفیر بھی ملاقات میں موجود تھے۔ملاقات کے دوران وزیر داخلہ نے کویتی وزیر اعظم کو وزیر اعظم عمران کا خصوصی مراسلہ بھی پیش کیا۔

کویتی وزیر اعظم اور وزیر داخلہ شیخ رشید احمد ملاقات میں اہم فیصلے کیے گئے جن میں پاکستان اور کویت کے درمیان فیملی اور بزنس ویزا کی فوری بحالی،پاکستانی ورکرز کو معاہدے کے مطابق کویتی ویزا جاری کرنے پراتفاق ہوا۔ملاقات میں طے پایا کہ میڈیکل اور آئیل فیلڈ میں ٹیکنیکل ویزا پر کوئی پابندی نہیں ہوگی،خلیج ممالک میں رہنے والے پاکستانی آن لائن ویزا لے کر اب کویت آسکیں گے۔ملاقات کے دوران کویتی وزیراعظم نے گفتگو کرتے ہوئے کہاکہ پاکستان اور کویت کے درمیان تعلقات

سات دہائیوں پر محیط ہیں،پاکستان اور کویت کے عوام کے درمیان پیار اور اعتماد کا رشتہ ہے۔ اس موقع پر وفاقی وزیرداخلہ شیخ رشید کا کہنا تھا کہ پاکستان اور کویت کے درمیان تعلقات انتہائی دیرینہ ہیں،باہمی تعلقات کی بنیاد باہمی بھائی چارہ اور محبت ہے۔ وزیر داخلہ شیخ رشید احمد نے کہاکہ تمام پاکستانی کویت کو اپنا دوسرا گھرسمجھتے ہیں،پاکستانی خاندانوں اور کاروباری طبقے کو کویتی ویزا بندش سے بے پناہ مسائل درپیش تھے،پاکستانی لیبر کا کویت کی اولین ترقی میں بہت اہم کردار ہے،ورکرز ویزا بحال ہونے سے پاکستانیوں کے لئے روزگار کے نئے مواقع پیدا ہونگے۔شیخ رشید احمد نے کہاکہ کاروباری ویزا بحالی سے دونوں ملکوں کے درمیان تجارت بڑھے گی۔

0 0 votes
Article Rating
Subscribe
Notify of
guest
0 Comments
Inline Feedbacks
View all comments